Breaking news

UN: 1,900 tonnes of food looted in Sudan

The World Food Program (WFP) raided a WFP office and looted 1,900 tons of food for about 730,000 people in one month: Stephen Dujarric




عالمی ادارہ برائے خوراک WFP کے ایک آفس پر حملہ کر کے ایک ماہ تک تقریباً 7 لاکھ 30 ہزار افراد کے لئے کافی 1900 ٹن خوراک کو لُوٹ لیا گیا ہے: سٹیفن دوجارک

UN: 1,900 tonnes of food looted in Sudan
The United Nations says the World Food Program (WFP) has looted food stored in the Sudanese city of Fisher for a month-long distribution.

Stephen Dujarric, a spokesman for the UN Secretary-General's Office, has strongly condemned the attacks and looting of UN buildings and equipment.

He says a WFP office was attacked on the evening of December 28 in the Sudanese city of Al-Fasher and looted 1,900 tons of food for about 730,000 people for a month.

Dujarric has said that UN Secretary General Antonio Guterres has called on the Sudanese government to ensure a secure environment for safe UN relief operations in the country.




اقوام متحدہ نے کہا ہے کہ سوڈان کے شہر فاشر میں عالمی ادارہ برائے خوراک WFP کے ایک ماہ تک تقسیم کے لئے جمع خوراک کے ذخیرے کو لُوٹ لیا گیا ہے۔

اقوام متحدہ سیکرٹری دفتر کے ترجمان سٹیفن دوجارک نے اقوام متحدہ کی عمارتوں اور سازو سامان پر حملوں اور ان کی لوٹ مار کی شدید مذمت کی ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ سوڈان کے شہر الفاشر میں 28 دسمبر کی شام WFP کے ایک آفس پر حملہ کر کے ایک ماہ تک تقریباً 7 لاکھ 30 ہزار افراد کے لئے کافی 1900 ٹن خوراک کو لُوٹ لیا گیا ہے۔

دوجارک نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گٹرس نے سوڈان حکومت سے اپیل کی ہے کہ ملک میں اقوام متحدہ کی محفوظ امدادی کاروائیوں کے لئے سکیورٹی کی فضا یقینی بنائی جائے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button