Cryptocurrency

Policeman arrested for demanding millions of dollars in cryptocurrency ransom

New Delhi: An Indian police constable has been arrested on charges of kidnapping a cryptocurrency trader and demanding  40 million in cryptocurrency and millions of rupees in cash as ransom.

According to foreign media reports, a police constable along with his accomplices kidnapped a 38-year-old businessman in Pune, Maharashtra, in the Indian state of Maharashtra.
According to the report, Dilip Takaram was informed that the police had received a complaint regarding the kidnapping of the businessman and was pursuing Takaram and his accomplices.
It may be recalled that this week, the Indian government, in collaboration with the central bank, announced the introduction of digital rupee, legalizing cryptocurrency and imposing 30% tax on profits earned from cryptocurrency.
Policeman arrested for demanding millions of dollars in cryptocurrency ransom

نئی دہلی : بھارتی پولیس کانسٹیبل کرپٹو کرنسی کے تاجر کو اغوا کرنے اور چار کروڑ ڈالر مالیت کی کرپٹو کرنسی اور لاکھوں روپے نقد بطور تاوان مانگنے کے جرم میں گرفتار کرلیا گیا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق بھارتی ریاست مہاراشٹرا کے شہر پونے میں پولیس کانسٹیبل نے اپنے ساتھیوں کے ہمراہ 38 سالہ تاجر کو اغوا کیا جس سے متعلق پولیس اہلکار کو گمان تھا کہ وہ بڑے پیمانے پر کرپٹو کرنسی کی تجارت کرتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق دلیپ تکارم کو اطلاع ملی تھی کہ تاجر کو اغوا کرنے سے متعلق پولیس کو شکایت موصول ہوئی ہے اور وہ تکارم اور اس کے ساتھیوں کا تعاقب کررہی ہے۔

خیال رہے کہ رواں ہفتے بھارتی حکومت نے مرکزی بینک کے تعاون سے کرپٹو کرنسی کو قانونی حیثیت دیتے ہوئے ڈیجیٹل روپیہ متعارف کرانے کا اعلان کیا ہے اور کرپٹو کرنسی سے کمائے گئے منافع پر 30 فیصد ٹیکس بھی عائد کیا گیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button