News
Trending

Imran Khan says the military is completely fit for obstructing any animosity

KAMRA:
The Pakistan Air Force (PAF) on Friday unveiled the latest addition to its fleet – the next-generation Chinese J-10C fighter jets – during the induction ceremony attended by Prime Minister Imran Khan, the three services chiefs, Chinese ambassador, and others at the Minhas Air Base, Kamra.

Prime Minister Imran Khan congratulated the nation on the historic occasion of the induction of J-10C aircraft, emphasizing that a country could not remain free and independent until it was able to defend itself.

The prime minister said that Pakistan had full confidence in its armed forces that possessed the capabilities of the highest degree to defend the country. “We are confident that if anyone makes an aggressive move against Pakistan, it would be retaliated by the armed forces with full force,” he added.

Developed by China’s state-owned Aviation Industry Corporation of China (AVIC), the J-10C is an all-weather, single-engine, single-seat, multi-role, fourth-plus generation fighter jet. Also known as Vigorous Dragon, according to the AVIC, it can rival the French Rafale jet.

PM Imran Khan thanked China for delivering the jets to Pakistan in a short period of eight months. He expressed his satisfaction over PAF fully equipping itself on the lines of modern and indigenous technology. “Pakistan is heading in the right direction towards development and prosperity.”

Chief of Air Staff Air Chief Marshal Zaheer Ahmad Babar Sidhu said the PAF was prepared and skilled to deter any aggression of the enemy. He added that the J-10C was a fully integrated weapon, avionic, and combat system and its induction would further strengthen the PAF’s professional capabilities.

Earlier, the prime minister reviewed the guard of honor from a PAF contingent. Flanked by three services chiefs, he also inspected the J-10C aircraft and sat in the cockpit where he was given a briefing about the jet. The guests then witnessed a thrilling flypast of various formations of aircraft.

The formations included the newly inducted J-10C, F-16s, JF-17s, and Mirage that showcased a sophisticated array of avionics and weaponry. After the flypast, the prime minister witnessed the landing of five J-10C aircraft that have been inducted in the 15 Squadron.

Major milestone

The J-10C can be equipped with a bigger active electronically scanned array (AESA) radar than the one used by the JF-17 Block 3. The aircraft can carry more advanced, fourth-generation air-to-air missiles, including the short-range PL-10 and the beyond-visual-range PL-15.

China’s Global Times reported that the official commissioning of the J-10C into the PAF was yet another major milestone, as it marked the systematized organic export of the country’s advanced aviation equipment to Pakistan.

j 10c fighter jet
کامرہ:
پاک فضائیہ (پی اے ایف) نے جمعہ کو اپنے بیڑے میں تازہ ترین اضافے کی نقاب کشائی کی - اگلی نسل کے چینی J-10C لڑاکا طیاروں کی شمولیت کی تقریب میں وزیراعظم عمران خان، تینوں مسلح افواج کے سربراہان، چینی سفیر اور دیگر نے شرکت کی۔ منہاس ایئر بیس، کامرہ۔

وزیراعظم عمران خان نے J-10C طیاروں کی شمولیت کے تاریخی موقع پر قوم کو مبارکباد دیتے ہوئے اس بات پر زور دیا کہ کوئی ملک اس وقت تک آزاد اور خود مختار نہیں رہ سکتا جب تک وہ اپنا دفاع نہیں کر سکتا۔

وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان کو اپنی مسلح افواج پر مکمل اعتماد ہے جو ملک کے دفاع کی اعلیٰ ترین صلاحیتوں کی مالک ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہمیں یقین ہے کہ اگر کسی نے پاکستان کے خلاف جارحانہ اقدام کیا تو مسلح افواج اس کا بھرپور جواب دیں گی۔
چین کی سرکاری ایوی ایشن انڈسٹری کارپوریشن آف چائنا (AVIC) کی طرف سے تیار کردہ، J-10C ایک ہمہ موسم، سنگل انجن، سنگل سیٹ، ملٹی رول، چوتھی پلس جنریشن لڑاکا جیٹ ہے۔ AVIC کے مطابق اسے Vigorous Dragon کے نام سے بھی جانا جاتا ہے، یہ فرانسیسی رافیل جیٹ کا مقابلہ کر سکتا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے آٹھ ماہ کی مختصر مدت میں پاکستان کو جیٹ طیارے فراہم کرنے پر چین کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے پی اے ایف کی جانب سے خود کو جدید اور مقامی ٹیکنالوجی سے لیس کرنے پر اطمینان کا اظہار کیا۔ پاکستان ترقی اور خوشحالی کی سمت درست سمت میں گامزن ہے۔

پاک فضائیہ کے سربراہ ائیر چیف مارشل ظہیر احمد بابر سدھو نے کہا کہ پاک فضائیہ دشمن کی کسی بھی جارحیت کو روکنے کے لیے تیار اور ہنر مند ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ J-10C ایک مکمل طور پر مربوط ہتھیار، ایونک اور جنگی نظام ہے اور اس کی شمولیت سے پی اے ایف کی پیشہ ورانہ صلاحیتوں کو مزید تقویت ملے گی۔
قبل ازیں وزیراعظم نے پاک فضائیہ کے دستے سے گارڈ آف آنر کا جائزہ لیا۔ تین سروسز چیفس کے ہمراہ، انہوں نے J-10C طیارے کا بھی معائنہ کیا اور کاک پٹ میں بیٹھ کر انہیں جیٹ کے بارے میں بریفنگ دی گئی۔ اس کے بعد مہمانوں نے طیاروں کی مختلف شکلوں کا ایک سنسنی خیز فلائی پاسٹ دیکھا۔

فارمیشنوں میں نئے شامل کیے گئے J-10C، F-16s، JF-17s اور Mirage شامل تھے جنہوں نے ایویونکس اور ہتھیاروں کی جدید ترین صف کی نمائش کی۔ فلائی پاسٹ کے بعد وزیراعظم نے پانچ J-10C طیاروں کی لینڈنگ کا مشاہدہ کیا جنہیں 15 سکواڈرن میں شامل کیا گیا ہے۔
اہم سنگ میل

J-10C JF-17 بلاک 3 میں استعمال ہونے والے ریڈار کے مقابلے میں ایک بڑے فعال الیکٹرانک سکینڈ ارے (AESA) ریڈار سے لیس ہو سکتا ہے۔ یہ طیارہ زیادہ جدید، چوتھی نسل کے ہوا سے ہوا میں مار کرنے والے میزائل لے سکتا ہے، بشمول مختصر رینج PL-10 اور بصری رینج PL-15 سے باہر۔

چین کے گلوبل ٹائمز نے رپورٹ کیا کہ PAF میں J-10C کی باضابطہ شمولیت ایک اور اہم سنگ میل تھا، کیونکہ اس نے پاکستان کو ملک کے جدید ترین ہوابازی کے آلات کی منظم آرگینک ایکسپورٹ کو نشان زد کیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button