News

عمر شريف انتقال کر گئے، ايک عہد کا خاتمہ

معروف پاکستانی اسٹيج آرٹسٹ اور کاميڈيئن عمر شريف انتقال کر گئے ہيں۔ عمر شريف کا انتقال جرمنی کے شہر نيورمبرگ کے ایک ہسپتال میں آج ہفتے دو اکتوبر کی صبح ہوا۔

Umar Sharif

عمر شریف کو علاج کی غرض سے پاکستان سے امريکا لے جايا جا رہا تھا تاہم تين روز قبل ٹرانزٹ کے دوران ان کی طبيعت بگڑ گئی اور انہيں نيورمبرگ کے ايک ہسپتال میں منتقل کر ديا گيا۔

جرمنی ميں تعينات پاکستانی سفير ڈاکٹر محمد فيصل نے ايک ٹويٹ ميں عمر شريف کے وفات پانے کی تصديق کر دی ہے۔ انہوں نے بتايا کہ پاکستانی سفارت خانے کا عملہ اس وقت ہسپتال ميں موجود ہے اور اہل خانہ کو ہر ممکن مدد فراہم کی جا رہی ہے۔ ڈاکٹر محمد فيصل نے اہل خانہ کے ساتھ افسوس کا اظہار بھی کيا۔

عمر شريف کو ايئر ايمولينس کے ذريعے منگل کے دن پاکستان سے امريکا کے ليے روانہ کر ديا گيا تھا۔ ان کی اہليہ زرين عمر بھی ان کے ہمراہ تھيں۔ تاہم پرواز کے دوران عمر شريف کی حالت بگڑ گئی اور طبی وجوہات کی بنا پر ان کا جہاز ہنگامی بنيادوں پر نيورمبرگ اتر گيا تھا۔

جرمنی ميں انسانی بنيادوں پر ہمدری کے تحت انہيں اور ان کی اہليہ کو پندرہ دن کے ويزے بھی جاری کر ديے گئے تھے۔ بعد ازاں وہ نيورمبرگ کے ہسپتال میں زیر علاج تھے۔

عمر شريف انيس اپريل سن 1955 ميں کراچی کے علاقے لياقت آباد ميں پيدا ہوئے تھے۔ انہيں ايشيا کے کامياب اور مقبول ترين فنکاروں ميں شامل کيا جاتا ہے۔

ان کے انتقال کی خبريں آتے ہی پاکستان ميں کئی فنکار افسوس کا اظہار کر رہے ہيں۔ فيصل قريشی نے اپنی ٹويٹ ميں کہا کہ وہ ‘کاميڈی کے کنگ‘ کی وفات پر افسردہ ہيں اور يہ کے عمر شريف پاکستانی صنعت کا اثاثہ تھے۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button